View RSS Feed

BunnY

Marun To mai Kisi Chehray May Rang Bhar Jaun .. مروں تو میں کسی چہرے میں رنگ بھر جاؤں

Rate this Entry
Quote Originally Posted by BunnY View Post
مروں تو میں کسی چہرے میں رنگ بھر جاؤں : احمد ندیم قاسمی

مروں تو میں کسی چہرے میں رنگ بھر جاؤں
ندیم کاش یہی ایک کام کر جاؤں

یہ دشتِ ترکِ محبت، یہ تیرے قرب کی پیاس
جو اذن ہو تو تیری یاد سے گزر جاؤں

میرا وجود میری روح کو پکارتا ہے
تیری طرف بھی چلوں تو ٹھر ٹھر جاؤں

تیرے جمال کا پر تو ہے سب حسینوں پر
کہاں کہاں تجھے ڈھونڈوں کدھر کدھر جاؤں

میں زندہ تھا کہ تیرا انتظار ختم نہ ہو
جو تو ملا ہے تو اب سوچتا ہوں مر جاؤں

یہ سوچتا ہوں کہ میں بت پرست کیوں نہ ہوا
تجھے قریب جو پاؤں ، خدا سے ڈر جاؤں

کسی چمن میں بس اس خوف سے گزر نہ ہوا
کسی کلی پہ نہ بھولے سے پاؤں دھر جاؤں

یہ جی میں آتا ہے کہ تخلیقِ فن کے لمحوں میں
کہ خون بن کے رگِ سنگ میں اتر جاؤں

Submit "Marun To mai Kisi Chehray May Rang Bhar Jaun .. مروں تو میں کسی چہرے میں رنگ بھر جاؤں" to Digg Submit "Marun To mai Kisi Chehray May Rang Bhar Jaun .. مروں تو میں کسی چہرے میں رنگ بھر جاؤں" to del.icio.us Submit "Marun To mai Kisi Chehray May Rang Bhar Jaun .. مروں تو میں کسی چہرے میں رنگ بھر جاؤں" to StumbleUpon Submit "Marun To mai Kisi Chehray May Rang Bhar Jaun .. مروں تو میں کسی چہرے میں رنگ بھر جاؤں" to Google

Tags: None Add / Edit Tags
Categories
Uncategorized

Comments